صحافی اطہر متین کے قاتلوں کی عدم گرفتاری کیخلاف کراچی پولیس آفس کے باہر احتجاج

کراچی (ڈیلی گرین گوادر) جرنلسٹس ایکشن کمیٹی کی جانب سے صحافی اطہر متین کے قاتلوں کی عدم گرفتاری پر کراچی پولیس چیف آفس پر احتجاجی دھرنا دیا گیا۔

کراچی پولیس چیف آفس کے باہر احتجاج میں کراچی پریس کلب کے ممبران ، تمام صحافتی تنظیموں کے کارکنوں نے شرکت کی، یہ صحافی کی شہادت کے بعد پہلا احتجاج تھا جو پولیس کو دیے گئے الٹی میٹم کے بعد کیا گیا۔احتجاج میں اطہر متین کے اہلخانہ بھی شریک ہوئے۔ اطہر متین کی صاحبزادی نے کراچی پولیس چیف غلام نبی میمن سے اپنے والد کیلئے انصاف کا مطالبہ کیا۔

احتجاج سے کراچی کی سیاسی و مذہبی جماعتوں کے نمائندوں نے بھی خطاب کیا جس میں شہر میں جاری بدامنی ختم کرنے اور اطہر متین کے قاتلوں کی گرفتاری کا مطالبہ کیا گیا۔احتجاج میں شریک صحافیوں نے شاہراہ فیصل کے فٹ پاتھ پر بھی علامتی احتجاج کیا۔ صحافیوں نے کہا کہ اگر قاتل گرفتار نہ ہوئے تو شاہراہ بھی بند کی جاسکتی ہے۔

کراچی پولیس چیف غلام نبی میمن نے اطہر متین کی صاحبزادی کے سر پر ہاتھ رکھا اور وعدہ کیا کہ اس کے والد کے قاتلوں کو گرفتار کریں گے اور انہیں قرار واقعی سزا دلوائیں گے۔جرنلسٹس ایکشن کمیٹی کل کراچی پریس کلب سے احتجاجی ریلی نکالے گی جو سندھ اسمبلی تک جائے گی اور وہاں احتجاج بھی کیا جائے گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے