سحرفاؤنڈیشن کے زیراہتمام ڈیرہ مراد جمالی میں 20 جوڑوں کی اجتماعی شادی

نصیرآباد (ڈیلی گرین گوادر)مقامی این جی او امید سحر فاؤنڈیشن کے زیر اہتمام ڈیرہ مراد جمالی میں 20 غریب اور یتیم جوڑوں کی اجتماعی شادی کا اہتمام کیا گیا،تقریب کے مہمان خاص صوبائی وزیر آبپاشی حاجی محمد خان لہڑی تھے،اجتماعی شادی کی تقریب میں ڈپٹی کمشنر نصیرآباد اظہر شہزاد،بی اے پی کے ضلعی صدر سابق چیئرمین میونسپل کمیٹی ڈیرہ مرادجمالی میر غلام نبی عمرانی، سید محمد یار شاہ، بلوچستان عوامی پارٹی تحصیل ڈیرہ اللہ یار کے صدر میر اللہ داد دشتی، میر حسین بخش پتافی، سید آل محمد جعفری، اختر حسین رضوانی، علامہ مقصود احمد ڈومکی، ہندو پنچایت کے رہنماؤں تارا چند سیٹھ،داسو مل،مولانا مشتاق حسین عمرانی، برکت علی چھلگری سمیت نصیرآباد ڈویژن سے تعلق رکھنے والے علماء کرام سیاسی و قبائلی عمائدین اور شہریوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی،شادی کی تقریب کے موقع پر صوبائی وزیر حاجی محمد خان لہڑی نے اپنی جانب سے غریب جوڑوں کے لئے ایک لاکھ روپے نقد دئیے جبکہ ہندو کمیونٹی کی جانب سے سیٹھ تارا چند نے 20 جوڑے کپڑے دیئے، اجتماعی شادی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر آبپاشی حاجی محمد خان لہڑی،ڈپٹی کمشنر نصیرآباد اظہر شہزاد اور بلوچستان عوامی پارٹی ضلع نصیرآباد کے صدر میر غلام نبی عمرانی نے خطاب کر تے ہوئے کہا کہ آج کے اس دور میں غریب لوگوں کی شادی کروانا نیک عمل ہے کیونکہ کئی بہنوں کی مالی مشکلات کی وجہ سے شادیاں نہیں ہو پا رہی ہیں اور ان کی عمر بھی گزر جاتی ہے، سحر فاؤنڈیشن کی جانب سے اجتماعی شادیوں کا انعقاد کروانا خوش آئند اقدام ہے، انہوں نے کہا کہ کلام اللہ میں بھی حکم ہے کہ اپنے نوجوانوں کی شادی کرواؤ اگر وہ غریب ہیں تو ان کی مالی مدد کرو اب ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ ہم اپنے رب کے احکامات پر صحیح معنوں میں عمل پیرا ہو کر جن غریب لوگوں کو جہیز کی صورت میں شادی کروانے میں مشکلات درپیش ہیں ان کی مدد کی جائے، انہوں نے کہا کہ انسانیت کے ناطے غریب لڑکیوں کی شادی میں مدد کرنا اور انہیں جہیز کی مد میں کچھ مالی امداد کرنا بحیثیت انسان ہماری ذمہ داریوں کا حصہ ہے اس عمل میں ہمیں بلا تفریق دین و فرقہ غریب لوگوں کی مدد کرنی چاہئے، جن لوگوں کو اللہ تعالیٰ نے رزق و مال کی نعمت سے نوازا ہے وہ اپنے مال میں سے غریبوں کی مدد کریں تاکہ کسی کے گھر آباد ہو سکیں کیونکہ کسی کا گھر آباد کرنا بہت اہمیت رکھتا ہے، آج خوشی کے اس موقع پر غریب جوڑوں کے چہروں پر مسکراہٹ قابل دید ہے، ہمیں اس عمل میں مزید بڑہوتری کرنی ہوگی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے